289

پنجاب کی بیوروکریسی سابقہ لیگی حکومت کی خامیاں ڈھونڈنے میں لگ گئی

حکومتی ترجیح! ترقیاتی منصوبوں کی تکمیل یا سابقہ حکومت کیخلاف وائٹ پیپر کی اشاعت؟ وزیر اعظم کے حکم پر پنجاب کی بیوروکریسی کو سابقہ حکومت کی خامیاں ڈھونڈنے کا ٹاسک سونپ دیا گیا۔یہ بھی لازمی پڑھیں:ہائیکورٹ کا تعلیمی اداروں میں منشیات کی روک تھام کیلئے پالیسی بنانے کا حکم

تحریک انصاف کی حکومت اپنی کارکردگی بہتر کرنے کی بجائے سابق حکومت کی خامیاں ڈھونڈنے میں لگ گئی، وزیراعظم پاکستان عمران خان نے پنجاب حکومت کو بڑا ٹاسک دے دیا، جس کے مطابق لیگی دور حکومت کے خلاف وائٹ پیپر جاری کرنا ہے، وائٹ پیپر میں سابق دور حکومت کی ناکام منصوبہ بندی، پالیسی، کرپشن اور بے ضابطگیاں شامل ہوں گی۔

ذرائع کےمطابق اب ایوان وزیراعلی نے بھی صوبائی محکموں سے رپورٹ طلب کرلی ہے جس میں ہر ادارہ پنجاب میں10 سالہ لیگی دور حکومت کی ناکامیوں کا خلاصہ پیش کرے گا، یہ ٹاسک سیکرٹری آئی اینڈ سی کے سپرد کیا جو تمام اداروں سے مذکورہ معلومات وصول کر کے ایک مفصل رپورٹ تیار کر کے ایوان وزیراعظم بھیجیں گے۔

ذرائع نے بتایا ہے کہ سابق دور حکومت میں ناصرف کرپشن، بلکہ بد انتظامی امور اور حکومت کی جانب سے سرکاری اداروں پر اثررسوخ سے متعلق بھی معلومات شامل ہوں گی، جبکہ ترقیاتی منصوبوں میں من پسند ٹھیکداروں کے بارے بھی وائٹ پیپرتشکیل دیا جائے گا۔یہ بھی لازمی پڑھیں:وزیراعظم عمران خان نے پنجاب کے وزراء پر بڑی پابندی لگادی

ذرائع کا کہنا ہے کہ پنجاب کی بیوروکریسی میں زیادہ تر لیگی دور حکومت کے افسران موجود ہیں، جن کو یہ ٹاسک دیا گیا ہے کہ وہ اب لیگی حکومت کے ہی دس سالہ ناکامیوں کا ریکارڈ بنائیں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں