231

قائمہ کمیٹیوں کے اجلاس منسوخ کیے جانے پر پی پی کا رد عمل

قائمہ کمیٹیوں کے اجلاس منسوخ کیے جانے پر پیپلز پارٹی کا رد عمل سامنے آیا ہے، پیپلز پارٹی کی رکن قومی اسمبلی شازیہ مری نے کہا ہے کہ پارلیمنٹ کو غیر جمہوری طریقے سے چلانے کی کوشش کی جارہی ہے۔

شازیہ مری نے کہا کہ قائمہ کمیٹیاں سارا سال کام کرتی ہیں، جبکہ قومی اسمبلی کا اجلاس سال میں صرف 130 دن ہوتا ہے، باقی دنوں میں قائمہ کمیٹیوں کے اجلاس نہیں ہوں گے تو پارلیمنٹ غیر فعال ہو جائے گی۔

انہوں نے کہا کہ اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر کی یہ ہدایت پروڈکشن آرڈر معاملے سے جڑی لگتی ہے، اسپیکر حکومت کے غیر جمہوری رویوں کے آگے بے بس نظر آرہے ہیں، اپوزیشن اس معاملے پر خاموش نہیں رہے گی، بھرپور مزاحمت کریں گے۔

واضح رہے کہ حکومت اور اپوزیشن کے درمیان محاذ آرائی کے بعد پارلیمنٹ میں ایک نیا بحران پیدا ہونے کا خدشہ پیدا ہو گیا ہے، اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر کی ہدایت پر مختلف قائمہ کمیٹیوں کے طلب کردہ اجلاس منسوخ کردیے گئے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں