34

آئندہ انتخابات میں کسی سیاسی جماعت سے اتحاد نہیں کریں گے، سراج الحق

میرجماعت اسلامی سراج الحق کا کہنا ہے کہ آئندہ جماعت اسلامی تنہا الیکشن لڑے گی، مذہبی جماعتوں سمیت کسی سے بھی سیاسی اتحاد نہیں ہوگا۔ ترازو کے نشان پر ہر حلقے سے امیدوار کھڑا کریں گے۔

24 نیوز کو خصوصی انٹرویو دیتے ہوئے امیر جماعت اسلامی نے کہ ہے کہ ملک کی موجودہ تباہی کی ذمہ دار تحریک انصاف، ن لیگ، پیپلز پارٹی اور ق لیگ کی پالیسیاں ہیں۔ عوام کے سامنے اپنا انقلابی ایجنڈا لے کر جائیں گے۔ اسٹیٹس کو کا خاتمہ کرکے رہیں گے چاہے کتنی ہی دیر کیوں نہ لگ جائے۔ اسلامی نظام میں ہی تمام مشکلات کا حل ہے۔ جاگیرداری اور سرمایہ دارانہ نظام کے باعث لوگ مذہبی جماعتوں کو ووٹ نہیں دیتے۔

انہوں نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ اگر قائداعظم کو قیام پاکستان کے بعد کچھ مہلت مل جاتی تو صورت حال مختلف ہوتی۔ مگر بدقسمتی سے انہیں زیادہ وقت نہیں مل سکا اور پاکستان ایسٹ انڈیا کمپنی کے پروردہ سرمایہ داروں کے شکنجے میں جکڑا گیا، جنہوں نے نہ صرف سیاسی جماعتوں کے قیام کے ذریعے اقتدار پر قبضہ کیا بلکہ بیورو کریسی کو اپنے اشاروں پر چلا کر تمام اداروں کو اپنے ماتحت کرلیا۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان اور اس کی عوام اب بھی حقیقی معنوں میں آزاد نہیں۔ انہیں اپنے ووٹ کی قدروقیمت کا اندازا نہیں۔ عوام کو پٹواری اور تھانے دار کےچکر میں الجھا دیا گیا یہ کہنا غلط نہ ہوگا کہ پاکستان میں ابھی تک جمہوریت نہیں آئی۔ پیپلز پارٹی اور ن لیگ ہی اقتدار پر قابض رہیں۔ آنیوالے انتخابات کی تیاریاں شروع کردی ہیں ماضی میں پاکستان نیشنل الائنس اور اسلامی جمہوری اتحاد کے پلیٹ فارم سے بھی جماعت اسلامی کو عوام تک رسائی دی گئی نہ اپنا پروگرام پیش کرنے کا موقع دیا گیا۔ اسلئے اب فیصلہ کیا ہے کہ اپنے نظریاتی ایجنڈے پر کام کریں گے۔ ہر حلقے میں جماعت اسلامی کا امیداوار کھڑا کیا جائے گا۔ 

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں